حکومت اور لیڈی ہیلتھ ورکرز میں مذاکرات کامیاب

اسلام آباد (ویب ڈیسک)

اسلام آباد میں حکومتی ٹیم اور لیڈی ہیلتھ ورکرز کے درمیان مذاکرات کامیاب ہوگئے۔ جس کے بعد لیڈی ہیلتھ ورکرز نے دھرنا ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

اعلامیہ کے مطابق حکومت ہیلتھ مہم کے دوران ملازمین کی سیکورٹی کے لیے تمام آئی جیز کو خط لکھے گی۔

علاوہ ازیں ملک بھر میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کی یکساں تنخواہوں کا معاملہ سی سی آئی کو بھجوایا جائے گا جبکہ پنشن اور گریجویٹی کا معاملہ وزیراعلیٰ پنجاب سیکریٹریٹ کی قائم کمیٹی کو بھجوایا جائے گا۔

ہیلتھ ورکرز کا کہنا تھا کہ پولیس سے شکوہ ہے کہ ہمارے ساتھی پر تشدد کیا گیا۔ ہماری آواز سننے پر وزیراعظم عمران خان کے شکر گزار ہیں، مطالبات پورے کرنے کے لیے کمیٹیاں بنائی گئی ہیں، ہمارے مطالبات پر فوری عملدر آمد ہوگا جبکہ اپ گریڈیشن کے لیے 3 ماہ دیے گئے ہیں۔

وزیرمملکت علی محمد خان نے کہا ہے کہ ہیلتھ ورکرز کے مطالبات پورے کررہے ہیں۔ وزیراعظم نے پرویز خٹک کی سربراہی میں کمیٹی بنائی ہے۔

لیڈی ہیلتھ ورکرز کے دھرنے میں تنخواہیں، الاؤنس بڑھانے اور سروس اسٹرکچر بنانے کے مطالبات شامل تھے۔

واضح رہے کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز نے آج پارلیمنٹ ہاؤس جانے کا اعلان کیا تھا۔تنخواہوں اور سالانہ الاؤنس میں اضافے اور سروس اسٹرکچر بنانے سمیت دیگر مطالبات کیلئے لیڈی ہیلتھ ورکرز نے 6 روز سے دھرنا دے رکھا تھا۔

Editor

Next Post

e-Paper – Daily Wifaq – Rawalpindi – 20-10-2020

منگل اکتوبر 20 , 2020
ملتی جلتی مزید خبریںاسلام آباد میں لیڈی ہیلتھ ورکرز اور سرکاری ملازمین…کابل: بم دھماکے میں پانچ ڈاکٹرز سمیت ہیلتھ ورکرز جاں بحقیونیورسٹیزکے طلبا کے متعلقہ حکام سے مذاکرات کامیاب ،…بلوچستان' 59ڈاکٹرز سمیت 97ہیلتھ ورکرز کورونا کا شکار