غزہ ، گذشتہ ہفتے اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے3فلسطینی شہید ہوئے

غزہ ، گذشتہ ہفتے اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے3فلسطینی شہید ہوئے

جوابی کارروائیوں میں چار صہیونی زخمی ہوئے،70مقامات پر تصادم ہوا

غزہ(ویب  نیوز) فلسطین میں بیت المقدس اور غزہ میں گذشتہ ایک ہفتے کے دوران اسرائیلی فوج کی فائرنگ کے باعث  3فلسطینی شہید ہوئے ۔ فلسطینی شہریوں کی طرف سے کی گئی جوابی کارروائیوں میں چار صہیونی زخمی ہوئے جب کہ گذشتہ ہفتے 70 مقامات پر فلسطینی شہریوں اور قابض فوج کے درمیان تصادم ہوا۔مرکز اطلاعات فلسطین کی رپورٹ کے مطابق گذشتہ ہفتے کے دوران فلسطینی شہریوں نے قابض یہودی آباد کاروں اور قابض فوج پر سنگ باری کی، اسرائیلی پولیس اور فوج کی پٹرولنگ پارٹیوں پر پٹرول بم پھینکے اور آتشیں اسلحے سے براہ راست فائرنگ کی۔غرب اردن میں 17 مقامات پر قابضفوج اور فلسطینیوں میں مزاحمتی کارووائیاں ہوئیں۔ جمعہ کے روز اسرائیلی فوج نے 34 سالہ فلسطینی خالد ماہر نوفل کو مغربی رام اللہ میں راس کرکر کے مقام پر گولیاں مار کر شہید کردیا۔جمعہ کے روز سلواد، رام اللہ، کفر مالک، دیر جریر، مشرقی اللبن، بیت دجن اور قلقیلیہ میں کفر قدوم کے مقامات پر فلسطینیوں اور صہیونی فوج کے درمیان تصادم ہوا۔جمعرات کو 1948 کے مقبوضہ فلسطینی علاقوں میں اسرائیلی پولیس اور عرب شہریوں کے درمیان تصادم ہوا۔ بدھ کے روز فلسطینیوں اور اسرائیلی فوج میں 12 مقامات پر تصادم ہوا۔ منگل کو غرب اردن کے شمالی شہر جنین میں فلسطینی شہریوں اور اسرائیلی فوج کے درمیان شدید جھڑپیں ہوئیں۔ سوموار کے روزاسرائیلی فوج کی ریاستی دہشت گردی میں 22 سالہ فلسطینی احمد حجازی شہید ہوگیا جب کہ اس روز 14 مقامات پر فلسطینیوں اور اسرائیلی فوج کے درمیان جھڑپیں ہوئیں۔ سوموار کو بیت المقدس میں دو اسرائیلی فوجی زخمی ہوئے۔

Comments are closed, but trackbacks and pingbacks are open.