وفاقی کابینہ کا 9 مئی کے بعد لاک ڈائون میں مزیدنرمی پر اتفاق

اسلام آباد(صباح نیوز)
وفاقی حکومت نے کورونا وائرس کے باعث ملک بھر میں نافذ لاک ڈائون میں 9مئی کے بعد مزید نرمی کرنے پراتفاق کرلیاجبکہ وزیراعظم سمیت وفاقی کابینہ کے تمام ارکان نے ایک ماہ کی تنخواہ ریلیف فنڈ میں دینے کا اعلان کیا۔وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس ہوا جس میں کورونا کی موجودہ صورتحال بریفنگ دی گئی۔ کابینہ نے قومی اقلیتی کمیشن کی تشکیل نو کی نئی سمری اور کرنسی نوٹوں پر وارنش کوٹنگ کے خاتمے کی منظوری دے دی۔اجلاس میں 61فوڈ اور نان فوڈ آئٹمز کو پاکستان اسٹینڈرڈ اینڈ کوالٹی کنٹرول اتھارٹی (پی ایس کیو سی اے)کی کوالٹی کنٹرول لسٹ میں شامل کرنے اور اخوت امریکا کے ساتھ پی ایم ریلیف فنڈ کے لیے عطیات جمع کرنے کے ایم او یو (مفاہمتی یادداشت)کی بھی منظوری دے دی گئی۔وفاقی کابینہ نے 9مئی کے بعد لاک ڈان میں مزید نرمی کرنے پراتفاق کیا تاہم اس کا حتمی فیصلہ قومی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں کیا جائے گا۔ وزیراعظم سمیت وفاقی کابینہ کے تمام ارکان نے ایک ماہ کی تنخواہ ریلیف فنڈ میں دینے کا اعلان بھی کیا۔

Comments are closed, but trackbacks and pingbacks are open.