کورونا سے 54 فیصد تنخواہ دار طبقہ متاثر ہوا: سروے

اسلام آباد: کورونا کے تیزی سے پھیلاؤ پر پاکستانی عوام کی اکثریت کو کافی تشویش ہے لیکن وہ مایوس نہیں، حالات میں بہتری کی امید رکھتے ہیں، کورونا کے منفی اثرات سے تنخواہ دار طبقے کے 54 فیصد افراد متاثر ہوئے، 27 فیصد بے روزگار ہوئے اور مزید 27 فیصد نے تنخواہ میں کٹوتی کا بتایا۔

گیلپ پاکستان نے پوچھا کہ ان کو کس حوالے سے تشویش ہے ؟ تو جواب میں 94 فیصد افراد نے گھر والوں کی صحت کی حفاظت کے حوالے سے تشویش کا اظہار کیا، 91 فیصد نے اپنے مالی انتظامات، 87 فیصد نے سیونگز کے متاثر ہونے، 87 فیصد نے قوت خرید میں کمی، 84 فیصد نے بنیادی ضروریات پوری کرنے میں پریشانی اور 59 فیصد نے بے روزگار ہونے کے ڈر کو اپنی تشویش کی وجہ بتائی۔

البتہ سروے میں یہ دیکھا گیا کے 41 فیصد افراد پر امید تھے کے کورونا کا مسئلہ 6 ماہ میں حل ہو جائے گا۔ سروے کے مطابق 20 فیصد کا خیال تھا کہ اس میں ایک سال لگ سکتا ہے جبکہ 13 فیصد کی رائے تھی کہ اس میں دوسا ل یا اس سے زائد کا عرصہ لگ سکتا ہے۔

سروے کے مطابق پر امید افراد میں نوجوانوں کی شرح زیادہ دیکھی گئی، 30 سال کی عمر کے 43 فیصد افراد 6 ماہ میں حالات میں بہتری کی امید کرتے نظر آئے جبکہ 30 سے 49 سال کے 41 فیصد اور 50 سال سے زائد عمر کے افراد میں پر امید ہونے کی شرح 31 فیصد تھی۔

Editor

Next Post

خانہ کعبہ اور حجر اسود کوچھونا منع ، حج کے متعلق نئے قواعدوضوابط جاری

پیر جولائی 6 , 2020
خانہ کعبہ اور حجر اسود کوچھونا منع ، حج کے متعلق نئے قواعدوضوابط جاری عازمین حج اور عملے کو ماسک اور دستانے پہننا ہونگے، حجاج کرام کے سرکے بال تراشنے والے ایک دوسرے کے آلات استعمال نہیں کرسکیں گے رمی کیلئے حجاج کو پیک شدہ کنکریاں فراہم کی جائیں گی،طواف […]