پہلی سے آٹھویں تک سکولزعید تک بند رکھنے کا فیصلہ

 امتحانات کا نیا شیڈول مدِنظر رکھتے ہوئے یونیورسٹیز میں داخلے کئے جائینگے،شفقت محمود

اسلام آباد (ویب ڈیسک)

حکومت نے پہلی سے آٹھویں تک اسکولزعید تک بند رکھنے اور  9 ویں سے 12 ویں تک تعلیمی ادارے آج (پیر سے) سخت کورونا ایس او پیز کے ساتھ کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی سربراہی میں بین الصوبائی وزرائے تعلیم کا ہنگامی اجلاس ہوا،جس میں چاروں صوبوں، آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان کے وزرائے تعلیم نے ویڈیولنک کے ذریعے شرکت کی، اجلاس میں تعلیمی اداروں میں کلاسز کی بحالی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اجلاس میں تمام صوبائی وزرائے تعلیم نے بورڈز کلاسز شروع کرنے کی سفارش کی، تاہم  این سی او سی کے حکام کا کہنا تھا کہ کیسز بڑھ رہے ہیں، ابھی تعلیمی ادارے نہ کھولیں تو بہتر ہو گا۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ملک  بھر میں پہلی سے آٹھویں تک سکولزعید تک بند رکھے جائیں گے، جب کہ 9 ویں سے 12 ویں تک تعلیمی ادارے آج (پیر کو) سے سخت کورونا ایس او پیز کے ساتھ کھولنے کا فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس کے حوالے سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری کیئے ایک بیان میں وفاقی وزیرِ تعلیم شفقت محمود نے بتایاکہ اجلاس میں اتفاقِ رائے سے تمام وزرائے تعلیم کے فیصلے لیے گئے، متاثرہ اضلاع میں نویں سے بارہویں تک ایک دن چھوڑ کے ایک دن کلاسیں شروع کی جائیں گی،کلاسیں شروع کرنے کا مقصد ہے طلبا بورڈ کے امتحانات کی تیاری کر سکیں، نویں سے بارہویں جماعت تک امتحانات مئی کے آخری ہفتے سے پہلے نہیں ہوں گے۔انہوں نے بتایا ہے کہ نویں سے بارہویں جماعت کے امتحانات نئی تاریخوں کے تحت ہوں گے، امتحانات کی نئی تاریخوں کا اعلان متعلقہ بورڈ کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ امتحانات کا نیا شیڈول مدِنظر رکھتے ہوئے یونیورسٹیز میں داخلے کئے جائیں گے۔mk

#/S