جہانگیر ترین گروپ سے کوئی لینا دینا نہیں، یہ پی ٹی آئی کا اندرونی معاملہ ہے…صدر شہبازشریف

مسلسل جیلیں کاٹ رہے ہیں، کیا یہ ڈیل ہے ؟ حکومت سے کس نے کہا کہ ہمیں این آر او دے دو ؟شہبازشریف

عمران خان کے حکم پر جیل میں ناروا سلوک کیا گیا

 رنگ روڈ اسکینڈل کے کردار سامنے آچکے، عمران خان نے خود رنگ روڈ توسیع کی منظوری دی اور بعد میں شورمچایا

جہانگیر ترین گروپ سے کوئی لینا دینا نہیں، یہ پی ٹی آئی کا اندرونی معاملہ ہے

ولی باغ چارسدہ میں بزرگ سیاستدان بیگم نسیم ولی خان کی وفات پر تعزیت کے موقع پر میڈیا سے بات

چارسدہ(ویب نیوز) پارلیمنٹ میں اپوزیشن لیڈر اور مسلم لیگ(ن)کے صدر شہبازشریف نے کہاہے کہ مسلسل جیلیں کاٹ رہے ہیں، کیا یہ ڈیل ہے ؟۔حکومت سے کس نے کہا کہ ہمیں این آر او دے دو ؟ عمران خان کے حکم پر جیل میں ناروا سلوک کیا گیا،ولی باغ چارسدہ میں بزرگ سیاستدان بیگم نسیم ولی خان کی وفات پر تعزیت کے موقع پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہبازشریف کا کہنا تھا کہ انتقامی کاررائیوں کا سامنا پہلی بار نہیں بہت پرانا ہے، مجھے 1996 میں سب سے پہلے گرفتارکیاگیا، مجھے اٹک اور لانڈھی جیل میں بھی رکھاگیا، حکومت سے کس نے کہا کہ  ہمیں این آر او دے دو، جیلیں کاٹ رہے ہیں کیا یہ ڈیل ہے۔ مجھے دوران جیل زمینوں پر سلایا جاتا تاکہ مجھے مزید تکلیف پہنچے، عدالتی حکم پر مجھے بہتر گاڑی میں لایاگیا، عدالت کی جانب سے اجازت ملنے کے باوجود مجھے بیرون ملک جانے سے روکا گیا جو توہین عدالت ہے۔شہبازشریف کا کہنا تھا کہ رنگ روڈ اسکینڈل کے کردار سامنے آچکے ہیں،2017 میں منصوبے کے کاغذات تیار ہو چکے تھے، ڈاکٹر توقیر میرے سیکریٹری رہ چکے ہیں میں نے انہیں بہت ایماندار پایا، وزیراعظم عمران خان نے خود رنگ روڈ توسیع کی منظوری دی اور بعد میں شورمچایا، بالکل اسی طرح پہلے چینی ایکسپورٹ کی منظوری دی اور بعد میں امپورٹ کاحکم دیا، ن لیگ نے رنگ روڈ سکینڈل پر واضح موقف اپنایا۔ چینی اسکینڈل میں اربوں روپے کمائے گئے، گندم، ادویات، ویکسینیشن اور دیگر اسکینڈلز بھی سب کے سامنے ہیں۔ ملکی معیشت کا بیڑہ غرق کر دیا گیا، مہنگائی سے عوام کی زندگی اجیرن بنا دی گئی، حکومت نے مہنگائی اور بے روزگاری میں اضافہ کیا، ویکسین اور مہنگائی کا نام لیں تو چور ڈاکو کہا جاتا ہے،اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ چور ڈاکو کہتے کہتے ملک کا کیاحال کردیا گیا، مہنگائی سے آج ہرطبقہ پریشان ہے، یہ ویکسین کاانتظام نہ کرسکے، عوام کو خیرات میں ملی ویکسین لگ رہی ہے، حکومت کی نااہلی کی وجہ سے آج کورونا نے ملک میں تباہی مچائی ہوئی ہے، ہم نے ڈینگی کا مقابلہ کیا تو ہمیں ڈینگی برادران کا نام دیاگیا، نوازشریف دورمیں 4 میٹرو اور موٹرویز بنائی گئیں لیکن ایک دھیلے کی بھی کرپشن ثابت نہیں کرسکے،  اور یہاں بی آر ٹی پشاور میں 126 ارب کی کرپشن ہوئی، بسیں چلیں نہیں بلکہ جل گئیں، ہم نے سستی بجلی پیدا کی اور  آج کیا ہورہاہے۔ ایک سوال کے جوا ب میں شہباز شریف نے کہا کہ جہانگیر ترین گروپ سے کوئی لینا دینا نہیں، یہ تحریک انصاف کا اندرونی معاملہ ہے، لیگی قائد نے ولی باغ میں بیگم نسیم ولی خان کے انتقال پر تعزیت کی اور کہا کہ بیگم نسیم ولی خان نے پاکستان بھر میں سیاسی جدوجہد کی، بیگم نسیم ولی خان بہادر خاتون تھیں، اے این پی کی دہشتگردی کیخلاف قربانیاں لازوال ہیں، خیبرپختونخوا کے ہر فرد نے دہشتگردی کا مقابلہ کیا

#/S