پی ڈی ایم قیادت”رینٹل مارچ“ کی منسوخی کے بعد 26مارچ کو ”عورت مارچ“ کریگی: حافظ حسین احمد

پی ڈی ایم قیادت”رینٹل مارچ“ کی منسوخی کے بعد 26مارچ کو ”عورت مارچ“ کریگی: حافظ حسین احمد

 عورت مارچ“ کا ایجنڈاوہی ”رینٹل مارچ“ کا ایجنڈا یعنی ”کرپشن بچاؤ“ہے اور اس کی منزل نیب کا ادارہ ہے

 پی ڈی ایم قیادت کے بقول نیب میں پیشی کے وقت لاکھوں کارکنان شرکت کریں گے البتہ اکثریت کو ”سلیمانی ٹوپی“ پہنی ہوگی

آزادی مارچ کی ناکامی سے لیکر استعفوں اور ”رینٹل مارچ“ کی منسوخی تک ہمارے موقف کا ایک ایک لفظ سچ ثابت ہورہا ہے

پی ڈی ایم کی تمام تر کوششیں اور تگ و دو صرف کرپشن کرنے والے مفرور مجرموں کی بچانے کی ناکام کوشش ہے

مفرور مجرموں کی کرپشن کو بچانے کے لیے ملک کی لوٹی ہوئی دولت کو لندن کے پناہ گزین بے دریغ استعمال کررہے ہیں

نظریاتی بننے والا مشرف سے لیکر آج کے این ار او نہ دینے کے دعویداسے بھی تین این آر او لے چکا جبکہ چوتھے کی تیاری ہے

 کوئٹہ/کراچی/لاہور (ویب  نیوز  ) جمعیت علماء اسلام پاکستان کے سینئر رہنما اور ممتاز پارلیمنٹرین حافظ حسین احمد نے کہاہے کہ پی ڈی ایم کے26مارچ 2021ء کے مجوزہ ”رینٹل مارچ“ کی عدم تیاری کے باعث منسوخی کی خفت کو مٹانے کے لیے اب 26مارچ 2021ء کو ہی پی ڈی ایم کے رہنماء اور لاکھوں کارکن محترمہ مریم نواز کی قیادت میں ”عورت مارچ“ کریں گے۔ وہ پیر کو اپنی رہائشگاہ جامعہ مطلع العلوم میں جمعیت علماء اسلام پاکستان کے مختلف وفوداور الیکٹرانک میڈیا سے گفتگو کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اس ”عورت مارچ“ کا اعلان پی ڈی ایم کے صدر مولانا فضل الرحمن نے محترمہ مریم نوازشریف کے ہمراہ جاتی امراء میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ یاد رہے اس”عورت مارچ“ کا ایجنڈا وہی ”رینٹل مارچ“ کا ایجنڈا یعنی ”کرپشن بچاؤ“ ہے اور ُاس کی منزل نیب کا ادارہ ہوگا جس میں بقول مولانا فضل الرحمن پی ڈی ایم قائدین کے علاوہ لاکھوں کی تعدادمیں کارکنوں کی شرکت ہوگی البتہ ان کی اکثریت مخصوص ”سلیمانی ٹوپی“ پہنے ہونے کی وجہ سے ”میڈیا“کو نظر نہیں آسکیں گے جس کے لیے پہلے ہی معذرت بھی کردی گئی ہے، جمعیت علماء اسلام پاکستان کے سینئر رہنما نے کہا کہ آزادی مارچ کی ناکامی سے لیکر استعفوں اور ”رینٹل مارچ“ کی منسوخی تک ہمارے اس موقف کے ایک ایک لفظ کی تصدیق ہوتی جارہی ہے کہ یہ تگ ودو صرف کرپشن کرنے والے مفرورمجرموں کو بچانے کی ناکام کوشش ہے جس کے لیے ملک کی لوٹی ہوئی دولت کو”رینٹل مارچ“ اور ”رینٹل احتجاج“ کے لیے لندن کے پناہ گزین بے دریغ استعمال کر رہے ہیں کیوں کہ ”پیسہ پھینک تماشہ دیکھ“ فارمولا کے چیمپین اب تک پرویز مشرف سے لیکر آج کے این ار او نہ دینے کے دعویداسے بھی تین این آر او لے چکے ہیں جبکہ چوتھے کی تیاری ہے۔