بھارت میں کورونا وائرس کی صورتحال مزیدسنگین، ایک دن میں ریکارڈ چار لاکھ سے زائدرونا متاثرین، سوا پانچ ہزار کے قریب ہلاکتیں

متاثرین کی تعداد  بڑھکر 1،91،64،969 ہوگئی

بھارت سے پروازوں پرپابندیوں میں 31 مئی تک توسیع

نئی دہلی  (ویب ڈیسک)

بھارت میں مسلسل کورونا وائرس کی صورتحال سینگین سے سنگین تر ہوتی جارہی ہے ، گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا  کے متاثرین کی تعداد بڑھ کر ریکارڈ چارلاکھ ایک ہزار 993  ہوگئی ہے اور یہ اب تک کے ایک دن کے سب سے زیادہ اعداد وشمار ہیں۔ جب کہ ایک دن کے دوران پانچ ہزار دو سو تینتیس 3) ،(523   ہلاکتیں بھی ہوئی ہیں جو ریکارڈ کے مطابق سب سے زیادہ شمار کی جارہی ہیں۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق ملک میں جان لیوا ور مہلک ترین کورونا وائرس کا قہر جاری ہے اور اس کے تیزی سے بدستور پھیلنے کے سبب تشویش میں اضافہ ہوگیا ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اس موذی وبا کی وجہ سے 3،523 افراد کی موت واقع ہوگئی جس سے ملک میں ہلاک شدگان کی مجموعی تعداد 2 لاکھ 11 ہزار 853 ہوچکی ہے۔ اسی عرصے کے دوران چا لاکھ دو ہزار سے زیادہ نئے کیسز رپورٹ ہوئے اور اسی مدت کے دوران 2.69 لاکھ سے زائد افراد اس وبا کو شکست دے کر شفایاب بھی ہوئے ہیں۔ملک میں انفیکشن کی تعداد 4،01،993 نئے کیسوں کے ساتھ بڑھ کر 1،91،64،969 ہوگئی۔ جب کہ وبا کی وجہ سے 3،523 افراد کی اموات کے ساتھ بڑھ کر 2،11،853 ہوگئی ہے۔ ہفتہ کی صبح 8 بجے تک کے تازہ ترین اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ کورونا کیسز میں مستقل اضافے کے بعد فعال معاملات میں اضافہ ہوا ہے جو 32،68،710 پر پہنچ گئے ہیں، جو مجموعی انفیکشن کا 17.06 فیصد ہے۔ جب کہ دوسری جانب ملکی سطح پر کورونا سے شفایاب ہونے کی شرح 81.84 فیصد ہوگئی ہے۔ اعداد وشمار کے مطابق کورونا کیسز میں اموات کی شرح 1.11 فیصد ہے۔واضح رہے کہ بھارت میں کووڈ 19 نے 7 اگسست کو 20 لاکھ کا ہندسہ عبور کیا تھا۔ 23 اگست کو 30 لاکھ، 5 ستمبر کو 40 لاکھ، جب کہ 16 ستمبر کو یہ اعدادوشمار 50 لاکھ ہوگئے تھے۔ لیکن 28 ستمبر آتے آتے یہ 60 لاکھ ہوچکا تھا۔ 11 اکتوبر کو 70 لاکھ، 29 اکتوبر کو 80 لاکھ کو عبور کیا۔ 20 نومبر کو 90 لاکھ، جب کہ 19 دسمبر آتے آتے بھارت نے ایک کروڑ کے نمبر کو پیچھے چھوڑ دیا، لیکن اپریل کے ماہ میں یہ ہندسہ 1.50 کروڑ کا سنگین سنگ میل عبور کرلیا۔انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ(آئی سی ایم آر)کے مطابق، 30 اپریل تک 28 کروڑ 83 لاکھ 37 ہزار 385 افراد کے نمونوں کی جانچ کی جا چکی ہے۔ جب کہ جمعہ کو ایک ہی دن میں کل 19 لاکھ 45 ہزار 299 ٹیسٹ کیے گئے ،علاوہ ازیں بھارتی شہری ہوا بازی کے ڈائرکٹر جنرل نے بین الاقوامی پروازوں پر پابندیوں کو /31 مئی تک بڑھادیا   ۔ ڈی جی سی اے نے البتہ ایک خصوصی سرکلر جاری کرتے ہوئے یہ وضاحت کی کہ بعض چندروٹس پر بین الاقوامی پروازیں چلائی جائیں گی ۔ ایسے کارگو آپریشنس بھی متاثر نہیں ہوں گے جنہیں شہری ہوا بازی ریگولیٹر کی جانب سے پہلے ہی منظوری مل چکی ہو ۔ ۔ حالیہ دنوں میں نئی دہلی میں کورونا وائرس کے معاملے بڑھنے کے بعد آسٹریلیا نے ہندوستان کیلئے اپنی تمام پروازوں کو روک دینے کا اعلان کیا ہے جبکہ کینیڈا ، یو اے ای اور برطانیہ نے بھی ہندوستان کیلئے اور ہندوستان سے اپنی پروازوں کو بند کردیا ہے.