کمزور وطاقتور کیلئے یکساں قانون ہی نظام میں بہتری لا سکتا ہے، عمران خان

کمزور وطاقتور کیلئے یکساں قانون ہی نظام میں بہتری لا سکتا ہے، عمران خان

کرپٹ عناصر کی سہولت کاری والے نظام کو درست کرکے قانون کی گرفت مضبوط کرنا چاہتے ہیں

وزیرِ اعظم کی مہتمم جامعہ رحیمیہ کراچی مفتی رحیم سے ملاقات میں گفتگو،گورنر سندھ عمران اسماعیل اور دیگر بھی موجود تھے

اسلام آباد (ویب  نیوز)وزیرِ اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ کمزور وطاقتور کیلئے یکساں قانون ہی نظام میں بہتری لا سکتا ہے،کرپٹ عناصر کی سہولت کاری والے نظام کو درست کرکے قانون کی گرفت مضبوط کرنا چاہتے ہیں،حکومت قانون کی بالا دستی کیلئے ہر ممکن اقدام اٹھا رہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انھو ں نے مفتی رحیم مہتمم جامعہ رحیمیہ کراچی سے ملاقات میں کیا ۔ملاقات میں گورنر سندھ عمران اسماعیل، قائد حذبِ اختلاف سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ، رفیع الدین، زبیر موتی، کرنل(ر)عبدالمغنی اور خلیل الرحمن مولا خیل شامل تھے ۔یہاں وزیراعظم آفس سے جاری بیان کے مطابق ملاقات میں وزیرِ اعظم کے ریاستِ مدینہ کے ویژن پر تفصیلی گفتگو کی گئی ۔اس کے علاوہ حکومت کی کاروبار دوست پالیسیوں کی بدولت بڑھتی ہوئی بیرونی سرمایہ کاری بھی گفتگو کا حصہ رہی۔وزیرِ اعظم نے اس موقع پر کہا کہ حکومت قانون کی بالا دستی کیلئے ہر ممکن اقدام اٹھا رہی ہے۔کمزور اور طاقتور کیلئے یکساں قانون اور دفاتر میں سزا اور جزا ہی نظام میں بہتری لا سکتا ہے۔حکومت کی اولین ترجیح ہے کرپٹ عناصر کی سہولت کاری والے نظام کو درست کرکے قانون کی گرفت مضبوط کی جائے۔