طواف کعبہ کے لیے ٹریکس کی تعداد 14 سے بڑھا کر 25 کر دی گئی

ریاض  (ویب ڈیسک)

مسجد حرام میں نمازیوں اور معتمرین کی تعداد کو کنٹرول کرنے کی ذمہ دار انتظامیہ کا کہنا ہے کہ صحن مطاف میں طواف کعبہ کے لیے مقرر کردہ ٹریکس کی تعداد 14 سے بڑھا کر 25 کردی گئی ہے۔ تمام ٹریکس کو دوبارہ ترتیب دیا گیا ہے۔ بزرگ اور خصوصی افراد کے لیے چار ٹریک مختص ہیں۔عرب میڈیا کے مطابق مسجد حرام میں نمازیوں کی تعداد اور مجمع کے امور کے ڈائریکٹر جنرل انجینیر اسامہ الحجیلی نے کہا کہ صحن مطاف میں ٹریکس کی تعداد بڑھانے کا مقصد کرونا وبا کے ایس او پیز پر عمل کرتے ہوئے معتمرین کو زیادہ سے زیادہ تعداد میں طواف کی سہولت فراہم کرنا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جہاں ٹریکس کی تعداد بڑھائی گئی ہے وہیں نمازیوں اور معتمرین کے درمیان سماجی فاصلے میں بھی اضافہ کیا گیا ہے۔حرمین شریفین میں انتظامی امور کے ادارے کا کہنا ہے کہ ماہ صیام کے موقع پر معتمرین اور نمازیوں کو تمام ضروری سہولیات فراہم کی گئی ہیں۔ انہوںنے معتمرین پر زور دیا کہ وہ عمرہ کے اجازت نامہ میں طے شدہ اوقات پر عمل درآمد کو یقینی بنائیں اور طواف اور دیگر مناسک کے لیے اپنے مقررہ وقت پر حاضری یقینی بنائیں۔ وباء سے بچنے کے لیے ایس او پیز کا خیال رکھیں، ماسک پہنیں اور سماجی فاصلہ رکھیں۔انجینیر الحجیلی نے انکشاف کیا کہ مجمع کو کنٹرول کرنے کے لیے مختص عملے کو صحن مطاف، مطاف کی پہلی منزل، مصلی سنہ الطواف، گرائونڈ فلور مسعی، شاہ فہد کے دور میں ہونے والی توسیع اور مسجد حرام میں داخل ہونے والے نمازیوں اور معتمرین کے لیے مختص کردہ داخلی دروازوں پر تعینات کیے گئے ہیں.