چوتھی لہر ‘کورونا ایس او پیز کادائرہ کار 27شہروں تک بڑھا دیا گیا

چوتھی لہر ‘کورونا ایس او پیز کادائرہ کار 27شہروں تک بڑھا دیا گیا
کورونا پابندیوں میں 13ستمبر تک توسیع، دفاتر میں پچاس فیصد حاضری کے ساتھ کام کیا جائے گا
ملک بھر میں تعلیمی ادارے 50 فیصد حاضری اور تعطل کے ساتھ ہفتہ میں تین روزکھلے رہیں گے
تمام تجارتی سرگرمیاں سوائے ضروری سروسز کے رات آٹھ بجے بند کر دی جائیں گی
ہفتے میں دو دن تمام مارکیٹس بند رہیں گی تاہم دنوں کا تعین صوبوں کی صوابدید رہے گا
پبلک ٹرانسپورٹ پر سواریوں کی شرح 50 جبکہ ریل سروس 70 فیصد سواریوں کے ساتھ جاری رہے گی

اسلام آباد(ویب  نیوز) نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر(این سی او سی )نے کورونا وائرس کی چوتھی لہر کے پیش نظر ایس او پیز کا دائرہ کار ملک بھر کے 27شہروں تک بڑھا دیا گیا ہے جبکہ کورونا پابندیوں میں 13ستمبر تک توسیع کر دی گئی، تمام تجارتی سرگرمیاں سوائے ضروری سروسز کے رات آٹھ بجے بند کر دی جائیں گی جبکہ دفاتر میں پچاس فیصد حاضری کے ساتھ کام کیا جائے گا، ملک بھر میں تعلیمی ادارے 50 فیصد حاضری اور تعطل کے ساتھ ہفتہ میں تین روزکھلے رہیں گے ۔ نیشنل کنٹرول اینڈ آپریشن سینٹر نے نئی ہدایات جاری کر تے ہوئے کورونا ایس او پیز کا دائرہ کار 13 شہروں

 

سے بڑھا کر 27 کردیا ہے، ان 27 شہروں میں وفاقی دارالحکومت اسلام آباد، پنجاب کے 11 شہرخانیوال، میانوالی سرگودھا ، خوشاب ، بہاولپور ، ملتان ، گوجرانوالہ ، راولپنڈی ، لاہور اور رحیم یار خان  سندھ میں حیدرآباد اور کراچی ، آزاد کشمیر میں مظفرآباد اور میرپور، گلگت بلتستان میں گلگت اور اسکردو جبکہ خیبر پختونخوا میں پشاور، سوات، ہری پور، مانسہرہ، لوئر دیر، صوابی ، ایبٹ آباد ، اور چترال لوئر شامل ہیں۔کورونا ایس او پیز کے تحت ضروری سروسز کے سوا تمام تجارتی سرگرمیاں رات آٹھ بجے بند کر دی جائیں گی، ہفتے میں دو دن تمام مارکیٹس بند رہیں گی تاہم دنوں کا تعین صوبوں کی صوابدید رہے گا،ریسٹورنٹس میں انڈور ڈائننگ پر مکمل پابندی ہوگی، رات 10 بجے آئوٹ ڈور ڈائننگ کی اجازت ہوگی جبکہ ٹیک اوے کی سروس 24گھنٹے کھلی رہے گی۔این سی او سی کے مطابق انڈور شادیوں کی تقریبات پر مکمل پابندی ہوگی تاہم آئوٹ ڈور شادی کی تقریبات کی 300 مہمانوں کے ساتھ اجازت ہوگی۔ آئوٹ ڈور شادیوں کی تقریبات کے اوقات رات 10 بجے تک برقرار رہی گے مزارت پرزائرین کی آمد پر پابندی جاری رہے گی۔سنیما گھروں اور کنٹیکٹ کھیلوں(کراٹے ، باکسنگ ، مارشل آرٹس ، رگبی ، واٹر پولو ، کبڈی اور ریسلنگ)پر عائد پابندی جاری رہے گی۔ صرف ویکسینیٹڈ افراد ہی انڈور جم جا سکیں گی۔نیشنل کنٹرول اینڈ آپریشن سینٹر کی ہدایت کے مطابق سرکاری اور نجی دفاتر کے لیے عام دفتری اوقات کار 50 فیصد کے ساتھ جاری رہیں گے۔ پبلک ٹرانسپورٹ پر سواریوں کی شرح 50 جبکہ ریل سروس 70 فیصد سواریوں کے ساتھ جاری رہے گی۔ تفریحی پارکس اور سوئمنگ پولز کی بندش برقرار رہے گی تاہم عوامی پارکس میں کورونا پروٹوکول کے ساتھ داخلے کی اجازت ہوگی، ملک بھر میں تعلیمی ادارے 50 فیصد حاضری اور تعطل کے ساتھ ہفتہ میں تین روزکھلے رہیں گے۔ این سی اوسی اپنی نافذ کردہ ایس او پیز پر 13 ستمبر کو نظر ثانی کرے گا۔