شمالی وزیرستان میں سیکیورٹی فورسز کا آپریشن، ٹی ٹی پی کمانڈر ہلاک

صفی اللہ غیر سرکاری تنظیم کی 4 خواتین کے قتل، 2020 میں ایف ڈبلیو او کے انجینئرز کی ٹارگٹ کلنگ ، سکیورٹی فورسز پر حملوں میں بھی ملوث تھا

راولپنڈی (ویب ڈیسک)

شمالی وزیرستان کے علاقے میر علی میں سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کرکے کالعدم تحریک طالبان پاکستان(ٹی ٹی پی) کے کمانڈر صفی اللہ کو ہلاک کر دیا ۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر)کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے شمالی وزیرستان کے علاقے میر علی میں خفیہ اطلاعات پر آپریشن کیا جس میں ٹی ٹی پی کا دہشت گرد مارا گیا۔سیکیورٹی فورسز نے آپریشن میں اسلحہ اور گولہ بارود بھی برآمد کیا ہے۔آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ صفی اللہ کا تعلق میر علی سے تھا اور وہ فروری میں غیر سرکاری تنظیم کی 4 خواتین کے قتل میں ملوث تھا۔آئی ایس پی آر کا مزید کہنا ہے کہ دہشت گرد صفی اللہ 2020 میں ایف ڈبلیو او کے انجینئرز کی ٹارگٹ کلنگ میں بھی ملوث تھا۔شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق صفی اللہ سکیورٹی فورسز پر آئی ای ڈی حملوں اور منصوبہ بندی میں بھی ملوث تھا، ہلاک دہشتگرد بھتہ خوری اور اغوا برائے تاوان کی متعدد وارداتوں میں بھی ملوث تھا۔