صدر مملکت نے بینکنگ محتسب کا پرائیویٹ بینکوں کو شکایت کنندگان کے اکاؤنٹ میں 12 لاکھ کی رقم جمع کرانے کا فیصلہ برقرار رکھا

اسلام آباد (ویب ڈیسک)

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے  بینکنگ محتسب کا پرائیویٹ بینکوں کو شکایت کنندگان کے اکاؤنٹ میں 12 لاکھ کی رقم جمع کرانے کا فیصلہ برقرار رکھا ہے ۔صدر مملکت ڈاکٹر صدر عارف علوی نے کہا ہے کہ صارفین کی اجازت کے بغیر الیکٹرانک فنڈ ٹرانسفر کی سہولت فراہم کرنے کی وجہ سے رقم کا نقصان برداشت کرنا پڑا، انہوں نے کہا کہ بینک قانون پر عمل درآمد کے حوالے سے کوئی بھی دستاویز پیش کرنے میں ناکام رہے یاد رہے پرائیویٹ بینکوں نے بینکنگ محتسب کے فیصلے کے خلاف صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کو درخواست دی تھی ۔نجمہ سلطانہ، زاہد شاہ اور طارق محمود چوہدری نامی شہریوں کے اکانٹس سے دھوکہ دہی سے 12 لاکھ سے زائد کی رقم نکال لی گئی تھی۔شکایت کنندگان نے نوسر باز افراد کو ٹیلی فون پر اپنے بینک اکاؤنٹس کی تفصیلات فراہم کی تھیں۔شکایت کنندگان نے اپنے بینکس کی جانب سے آن لائن بینکنگ کے سہولت حاصل نہیں کر رکھی تھی۔بلا اجازت اکانٹس سے رقم ٹرانسفر کرنے پر بینکنگ محتسب نے پرائیویٹ بینکوں کو رقم واپس کرنے کا حکم دیا تھا اور فیصلہ کیا تھا کہ بینک صارفین کو اپنی مصنوعات کے بارے میں آگاہی اور تعلیم دینا بینکوں کی ذ مہ داری ہے،